مطلوبہ
معلومات جو انصاف کے کٹہرے میں لائے

صالح الاروری

پچاس لاکھ ڈالر تک

اکتوبر 2017 میں صالح الاروری، جس نے ازدین القاسم بریگیڈ قائم کیا جو کہ حماس کے فوجی گروہوں میں سے ایک ہے کو حماس کے سیاسی بیورو کے ڈپٹی لیڈر کے طور پر چُنا گیا۔ الاروری فلسطین میں حماس کی فوجی کاروائیوں سے متعلق ہدایات جاری کرتا ہے اور مالی مدد مہیا کرتا ہے اور اُس کا تعلق کئی خود کش حملوں اور اغواؤں سے ہے۔ 2014 میں الاوروی نے اعلان کیا اور حماس کی ذمہ داری 12 جون، 2014 کو ہونے والے حملے میں قبول کی جس میں فلسطین میں تین کم سن نوجوانوں کو اغواء کر کے قتل کیا گیا جس میں اسرائیلی اور امریکی دوہری شہریت رکھنے والے نفتالی فرینکل بھی شامل ہیں۔ اُس نے اعلانیہ اُس قاتلانہ حملے کو ایک “بہادرانہ کاروائی” کہا۔ ستمبر 2015 میں الاروری کو سٹیٹ ڈپارٹمنٹ نے عدالتی حُکم نامے 13224 کے تحت ایک مخصوص عالمی دہشت گرد قرار دیا، ایک ایسا کام جس کی وجہ سے اُس کے مالی اثاثوں پر پابندیاں لگ گئیں۔

ایک اور تصویر

Lebanese Hizballah Poster - English
Lebanese Hizballah Poster - Arabic
Lebanese Hizballah Poster - Farsi
Lebanese Hizballah Poster - French